30 November, 2008

TAJWEED UL QURAN

26 November, 2008

MANHAJ-E-INQLAAB-E-NABWI 06

MANHAJ-E-INQLAAB-E-NABWI 05

MANHAJ-E-INQLAAB-E-NABWI 04

MANHAJ-E-INQLAAB-E-NABWI 03

MANHAJ-E-INQLAAB-E-NABWI 02

MANHAJ-E-INQLAAB-E-NABWI 01

25 November, 2008

TAHREEK-E-DAWAT 08

TAHREEK-E-DAWAT 07

TAHREEK-E-DAWAT 06

TAHREEK-E-DAWAT 05

TAHREEK-E-DAWAT 04

TAHREEK-E-DAWAT 03

TAHREEK-E-DAWAT 02

TAHREEK-E-DAWAT 01

17 November, 2008

SHIRK

16 November, 2008

SURAH HAMEEM AS SAJIDAH AYAAT 30 TO 36

SURAH AL-E-IMRAN LAST RAKOO

14 November, 2008

SURAH AL ASSAR

SURAH AL ASSAR

12 November, 2008

SURAH AL BAQRAH AYET 177

SURAH AL FATIHA

SURAH ATAOBAH AYET 24

(دین و مذہب کا فرق (ڈایاگرام



November 13, 2008 8:30 AM
Anonymous said...
Masha Allah, Subhan Allah.. very nice and realy devotion. May Allah guid all of us (Ameen)

11 November, 2008

(دینِ اسلام (ڈایاگرام

(دینِ جمھور (ڈایاگرام

(فرائض دینی کا جامع تصور (ڈایاگرام

(فرائض دینی کے تقاضے (ڈایاگرام

09 November, 2008

جنت میں جہنّم

جنت میں جہنّم
اسرار ایوب
وزیرستان جو آجکل میدانِ جنگ بنا ہوا ہے،میری زندگی میں اسلیے بڑی اہمیت کا حامل ہے کہ اس ایجنسی کے روکھے سوکھے اور گرم شمالی حصے میںوہ ہری بھری اور ٹھنڈی جگہ بھی واقع ہے جسے رزمک کہتے ہیں اورجہاںوہ کیڈٹ کالج موجود ہے جس کی آغوش نے چار برس تک مجھے تعلیم دی اور میری تربیت بھی کی۔ آٹھویں جماعت میں ہمارے انگریزی کے استاد ایک انگریز ہوا کرتے تھے اور جس دن سے تبلیغی جماعت والوں نے یہ بتایا تھا کہ ایک کافر کو مسلمان بنانے اور جہنّم کی آگ سے بچانے کا کتنا ثواب ہوتا ہے،دل و دماغ پردن رات انہیں اسلام قبول کروانے کی دھن سوار رہتی تھی۔انکی نرم مزاجی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے ہماری کلاس کے لڑکے آئے روز انہیں بڑے زورو شور سے کلمہ پڑھنے کی دعوت دیتے رہتے تھے جسے وہ بڑی خندہ پیشانی کے ساتھ ایک کان سے سن کر دوسرے سے نکال دیا کرتے تھے۔


07 November, 2008

اسلامی بینکاری ـ عملی پہلو

اسلامی بینکاری ـ عملی پہلو
(عطا الرحمان عارف)
پس منظر:
اسلامی بینکاری کا پاکستان میں آغاز 1997ء میں المیزان انوسٹمنٹ بینک کے قیام سے ہوا جوکہ 2002ء میں پاکستان کے پہلے اسلامی کمرشل بینک کی حیثیت سے تبدیل ہوا اور مرکزی بینک نے اس کو باقاعدہ روایتی بینکوں کی طرح کھاتہ کھولنے اور کھاتہ داروں سے رقوم وصول کرنے کا اختیار دے دیا۔
اس بینک کے قیام میں بنیادی عنصر تو حقیقتاً وہ معروف فیصلہ تھا جس میں اسلامی شرعی عدالت نے سودکو حرام قرار دے کر حکومت کو تین سال کا وقت دیا تھا تاکہ بینکوں سے سود کا خاتمہ کردیا جائے۔ اس شرعی عدالت کے ایک جج جسٹس تقی عثمانی کی رہنمائی میں اور ملائشیا و بحرین کے اسلامی بینکوں کے تجربہ کی بنیاد پر میزان بینک نے کام کا آغاز کیا۔

تین چیزوں کی محبت

جلس رسول الله صلى الله عليه وسلم مع اصحابه رضي الله عنهم

ایک دن نبی اکرم ﷺ اپنے صحابہ کے ساتھ تشریف فرما تھے۔ وسألهم مبتدأ أبي بكر ماذا تحب من الدنيا ؟

نبی اکرم نے حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ تعالی عنہ سے پوچھا کہ تمھیں دنیا میں کیا پسند ہے۔ فقال ابي بكر ( رضي الله عنه) أحب من الدنيا ثلاث

توحضرت ابی بکر (رضی اللہ عنہ) نے فرمایا کہ مجھے دنیا کی تین چیزیں پسند ہیں۔

الجلوس بين يديك – والنظر اليك – وإنفاق مالي عليك

آپکے سامنے بیٹھنا اور آپ کودیکھتے رہنااور اپنا مال آپ پر خرچ کرنا وانت يا عمر ؟ قال احب ثلاث :

اور تمھیں اے عمر (رضی اللہ عنہ) کہا کہ مجھے بھی تین چیزیں پسند ہیں۔ امر بالمعروف ولو كان سرا – ونهي عن المنكر ولو كان جهرا – وقول الحق ولو كان مرا

نیکی کا حکم خواہ پوشیدہ ہو اور برائی سے منع کرنا خواہ کھلم کھلا ہو اور حق بات خواہ کڑوی ہو۔ وانت يا عثمان ؟ قال احب ثلاث: اطعام الطعام – وافشاء السلام – والصلاة باليل والناس نيام

اور تمھیں اے عثمان (رضی اللہ عنہ) کہا کہ مجھے بھی تین چیزیں پسند ہیں۔

کھانا کھلانا اور سلام کرنا اور رات کی نماز جب لوگ سوئے ہوئے ہوں وانت يا علي ؟ قال احب ثلاث: اكرام الضيف – الصوم بالصيف - وضرب العدو بالسيف

اور تمھیں اے علی (رضی اللہ عنہ) کہا کہ مجھے بھی تین ہی پسند ہیں۔

مہمان کی خاطر مدارت کرنا ، گرمی کا روزہ رکھنا اور دشمن کو تلوار سے ضرب لگانا ثم سأل أبا ذر الغفاري: وأنت يا أبا ذر: ماذا تحب في الدنيا ؟

قال أبو ذر :أحب في الدنيا ثلاث الجوع؛ المرض؛ والموت فقال له النبي (صلى الله عليه وسلم): ولم؟ فقال أبو ذر أحب الجوع ليرق قلبي؛ وأحب المرض ليخف ذنبي؛ وأحب الموت لألقى ربي

پھر آپ نے حضرت ابوزر غفاری (رضی اللہ عنہ) سے سوال کیا کہ اور تم اے ابو زر تمھیں دنیا میں کیا پسند ہے؟

ابوزر (رضی اللہ عنہ)نے کہا مجھے دنیا میں تین چیزیں پسند ہیں بھوک ، بیماری اور موت

تو آپ نے فرمایا کیوں؟ ابوزر نے جواب دیا کہ بھوک اس لیے پسند ہے کہ اس سے دل نرم ہوتا ہے اور بیماری اس لیے پسند ہے کہ اس سے گناہ جھڑتے ہیں اور موت اس لیے پسند ہے کہ اس سےمیری میرے رب سے ملاقات ہوگی۔

فقال النبي (صلى الله عليه وسلم) حبب إلى من دنياكم ثلاث الطيب؛ والنساء؛ وجعلت قرة عيني في الصلاة

پھر نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ مجھے تمھاری دنیا سے تین چیزیں پسند ہیں۔

خوشبو اورعورت اور میری آنکھوں کی ٹھنڈک نماز میں ہے وحينئذ تنزل جبريل عليه السلام وأقرأهم السلام وقال: وانأ أحب من دنياكم ثلاث تبليغ الرسالة؛ وأداء الأمانة؛ وحب المساكين؛

اور وہاں اس وقت جبریل علیہ السلام نازل ہوئے اور انہوں نے انہیں سلام کیا اور کہا کہ مجھے آپ کی دنیا سے تین چیزیں پسند ہیں، رسالت پہنچانا، امانت ادا کرنا اور مسکین سے محبت کرنا۔

ثم صعد إلى السماء وتنزل مرة أخرى؛ وقال : الله عز وجل يقرؤكم السلام

ويقول: انه يحب من دنياكم ثلاث لساناً ذاكراً ؛ و قلباً خاشعاً ؛ و جسداً على البلاءِ صابراً

پھر جبریل آسمان کی طرف چڑھ گئے اور دوسری مرتبہ پھر نازل ہوئے اور کہا کہ اللہ عزوجل نے آپ کو سلام بھیجا ہے اور فرماتے ہیں کہ انہیں بھی تمھاری دنیا کی تین چیزیں پسند ہیں۔ ذکر کرنے والی زبان ، ڈرنے والا دل ، اور مصیبت کے وقت صبر کرنے والا بدن۔

سبحان الله وبحمده ،،، سبحان الله العظيم

قرآن مجید کی دعائیں

قرآن مجید کی ترتیب کے مطابق

پہلا نمبر سورت کا اور دوسرا آیت کا ہے

ربنا تقبل منا انك انت السميع العليم (2/127) ، وتب علينا انك انت التواب الرحيم (2/128)، ربنا اتنا في الدنيا حسنة وفي الاخرة حسنة وقنا عذاب النار (2/201) ، ربنا افرغ علينا صبرا وثبت اقدامنا وانصرنا على القوم الكافرين (2/250) ، ربنا لا تؤاخذنا ان نسينا او اخطانا (2/286) ، ربنا ولا تحمل علينا اصرا كما حملته على الذين من قبلنا (2/286) ، ربنا ولا تحملنا ما لا طاقة لنا به واعف عنا واغفر لنا وارحمنا انت مولانا فانصرنا على القوم الكافرين (2/286) ، ربنا لا تزغ قلوبنا بعد اذ هديتنا وهب لنا من لدنك رحمة انك انت الوهاب (3/8)، ربنا انك جامع الناس ليوم لا ريب فيه ان الله لا يخلف الميعاد (3/9)، ربنا اننا امنا فاغفر لنا ذنوبنا وقنا عذاب النار (3/16)، اللهم مالك الملك تؤتي الملك من تشاء وتنزع الملك ممن تشاء وتعز من تشاء وتذل من تشاء بيدك الخير انك على كل شيء قدير (3/27) ، تولج الليل في النهار وتولج النهار في الليل وتخرج الحي من الميت وتخرج الميت من الحي وترزق من تشاء بغير حساب (3/27) ، رب هب لي من لدنك ذرية طيبة انك سميع الدعاء (3/38)، ربنا امنا بما انزلت واتبعنا الرسول فاكتبنا مع الشاهدين (3/53)، ربنا اغفر لنا ذنوبنا واسرافنا في امرنا وثبت اقدامنا وانصرنا على القوم الكافرين (3/147)، ربنا ما خلقت هذا باطلا سبحانك فقنا عذاب النار (3/191)، ربنا انك من تدخل النار فقد اخزيته وما للظالمين من انصار (3/192)، ربنا اننا سمعنا مناديا ينادي للايمان ان امنوا بربكم فامنا (3/193)، ربنا فاغفر لنا ذنوبنا وكفر عنا سيئاتنا وتوفنا مع الابرار (3/193) ، ربنا واتنا ما وعدتنا على رسلك ولا تخزنا يوم القيامة انك لا تخلف الميعاد (3/194)، ربنا اخرجنا من هذه القرية الظالم اهلها واجعل لنا من لدنك وليا واجعل لنا من لدنك نصيرا (4/75) ، ربنا ظلمنا انفسنا وان لم تغفر لنا وترحمنا لنكونن من الخاسرين (7/23)، ربنا افتح بيننا وبين قومنا بالحق وانت خير الفاتحين (7/89)، ربنا افرغ علينا صبرا وتوفنا مسلمين (7/126) ، انت ولينا فاغفر لنا وارحمنا وانت خير الغافرين (7/155) ، ربنا لا تجعلنا فتنة للقوم الظالمين ونجنا برحمتك من القوم الكافرين (10/86) ، رب اني اعوذ بك ان اسالك ما ليس لي به علم والا تغفر لي وترحمني اكن من الخاسرين (11/47) ، انت وليي في الدنيا والاخرة توفني مسلما والحقني بالصالحين (12/101)، ربنا انك تعلم ما نخفي وما نعلن وما يخفى على الله من شيء في الارض ولا في السماء (14/38) ، رب اجعلني مقيم الصلاة ومن ذريتي ربنا وتقبل دعاء (14/40) ، ربنا اغفر لي ولوالدي وللمؤمنين يوم يقوم الحساب (14/41) ، رب ادخلني مدخل صدق واخرجني مخرج صدق واجعل لي من لدنك سلطانا نصيرا (17/80)، ربنا اتنا من لدنك رحمة وهيئ لنا من امرنا رشدا (18/10)، رب انى وهن العظم منى واشتعل الراس شيبا ولم اكن بدعائك رب شقيا (19/4) ، رب اشرح لي صدري ويسر لي امري واحلل عقدة من لساني يفقهوا قولي (20/25)، رب زدني علما (20/114)، لا اله الا انت سبحانك ان ى كنت من الظالمين (21/87) ، رب لا تذرنى فردا وانت خير الوارثين (21/89) ، أني مسني الضر وانت ارحم الراحمين (21/83)، رب انزلنى منزلا مباركا وانت خير المنزلين (23/29)، رب اعوذ بك من همزات الشياطين واعوذ بك رب ان يحضرون (23/98)، ربنا امنا فاغفر لنا وارحمنا وانت خير الراحمين (33/109)، ربنا اصرف عنا عذاب جهنم ان عذابها كان غراما انها ساءت مستقرا ومقاما (25/65)، ربنا هب لنا من ازواجنا وذرياتنا قرة اعين واجعلنا للمتقين اماما (25/74) ، رب هب لى حكما والحقنى بالصالحين واجعل لى لسان صدق فى الاخرين واجعلنى من ورثة جنة النعيم (26/89) ، ولا تخزنى يوم يبعثون يوم لا ينفع مال ولا بنون الا من اتى الله بقلب سليم (26/89) ، رب نجني واهلي مما يعملون (26/169)، رب اوزعنى ان اشكر نعمتك التى انعمت على وعلى والدى وان اعمل صالحا ترضاه وادخلنى برحمتك فى عبادك الصالحين (27/19) ، رب انى ظلمت نفسى فاغفرلى (28/16) ، رب انصرنى على القوم المفسدين (29/30)، ربنا وسعت كل شيء رحمة وعلما فاغفر للذين تابوا واتبعوا سبيلك وقهم عذاب الجحيم (40/9) ، ربنا وادخلهم جنات عدن التي وعدتهم ومن صلح من ابائهم وازواجهم وذرياتهم انك انت العزيز الحكيم وقهم السيئات ومن تق السيئات يومئذ فقد رحمته وذلك هو الفوز العظيم (40/9)، ربنا اكشف عنا العذاب انا مؤمنون (44/12) ، رب اوزعني ان اشكر نعمتك على وعلى والدي وان اعمل صالحا ترضاه واصلح لي فى ذريتى انى تبت اليك وانى من المسلمين (46/15) ، ربنا اغفر لنا ولاخواننا الذين سبقونا بالايمان ولا تجعل في قلوبنا غلا للذين امنوا ربنا انك رءوف رحيم (59/10) ، ربنا عليك توكلنا واليك انبنا واليك المصير (60/4)، ربنا لا تجعلنا فتنة للذين كفروا واغفر لنا ربنا انك انت العزيز الحكيم (60/5)، ربنا اتمم لنا نورنا واغفر لنا انك على كل شيء قدير (66/8)، رب ابن لي عندك بيتا فى الجنة (66/11) ، ونجني من القوم الظالمين (66/11) ، رب لا تذر على الارض من الكافرين ديارا انك ان تذرهم يضلوا عبادك ولا يلدوا الا فاجرا كفارا (71/27) ، رب اغفرلى ولوالدي ولمن دخل بيتى مؤمنا وللمؤمنين والمؤمنات ولا تزد الظالمين الا تبارا (71/28) .

(اسلام (فلو ڈیاگرام

November 11, 2008 9:31 AM

Hassan Ajaz said...

From Islamabad

Assalaam o alaikum. END HAY G END HAY! mubtadi nisaab kay b upload karen.aur muntakib nisaab 1,2 par b kaam shuruu kar dein. nuqabaa kay liyay bohat aasaani ho gee is kay zaryay. Hassan Ejaz

November 11, 2008 2:48 PM

Mian Faizan said...

Assalaam o alaikum. i am a student of tahir sb MashaAllah Allah ne inhain buhat insharah diya hai Deen k baray main tahir sb aik request hai apse bus is silsalay ko jaari rakhain ap ki in diagrams se kam se kam muddaris hazrat ko buhat faeda hoga inshaAllah Allah ap ko behtareen jaza day Mian Faizan Hassan Tanzeem-e-Islami Faisalabad

05 November, 2008

جہاد اور قتال

دیکھنا ایک عمل ہے اور دیکھ کر سمجھنا دوسری بات ہے جبکہ سمجھ کر اصل حقیقت پا لینا یہ اور ہی بات ہے۔چیزیں جیسے نظر آتی ہیں ایسی ہوتی نہیں ہیں ۔اہل نظر کے لیے ذوق نظر خوب ہے لیکن جو نظر حقیقت کو نہ پہنچ پائی وہ نظر کیا ہے؟

ہمارے ہاں جہاد کے نام پر جو عسکریت پھیل رہی ہے یا پھیلائی جارہی ہے اس کا نقصان کتنا ہے اور اس کے فوائد کیا ہیں اور اس سلسلے میں درست اسلامی نقطہ نظر کیا ہے ؟ اس جہاد کے جائز ناجائز ہونے پر اور اس کے افادے نقصان پر بہت کچھ کہا اور لکھا جاچکا ہے۔

اسی سلسلے میں ایک رائے یہ بھی سامنے آئی کہ پاکستانی نوجوانوں کے جذبہ جہاد کو استعمال کرتے ہوئے عالمی طاقتوں نے اسلامی ذھن رکھنے والے نوجوانوں کو معاشرے میںسے نکال نکال کر جہادی کیمپوں میں بھیجا کچھ کو اپنی ہی پھیلائی ہوئی اس جہادی بساط کی بھینٹ چڑھایا اور باقی ماندہ کو برین واش کرکے انتہا پسند بنادیا۔ اس سے فائدہ یہ ہوا کہ معتدل اور خالص اسلام پسند عنصر معاشرے سے غائب ہوگیا اور معاشرہ اس ایجنڈے کو نافذ کرنے کے لیے بالکل موزوں ہوگیا جس کی پشت پناہی یہ عالمی طاقتیں کررہی ہیں۔

جو لوگ ان کے راستے کی رکاوٹ بن سکتے تھے انہوں نے یا تو سرحدوں پر جاکر جانیں قربان کردیں یادشمنوں ہی کے پھیلائے ہوئے پھندے میں پھنس کر انتہا پسندی اور دہشت گردی کا راستہ اختیار کرلیا۔

قرآن مجید میں دو الفاظ آئے ہیں ایک جہاد اور دوسرا قتال اور یہ بات بہت غور کرنے کی ہے کہ لفظ جہاد اکثر اوقات قتال کے معنی میں استعمال ہوجاتا ہے لیکن جہاد اور قتال سوفیصد ہم معنی الفاظ نہیں ہیں۔جہاد بالنفس کی اصطلاح حدیث میں آئی ہے ۔ اسی طرح جہاد باللسان ہے البتہ جہاد بالسیف یا جہاد بالید کو قتال کہا جاتا ہے۔یہ کہا جاسکتا ہے کہ جہاد کے معنی وسیع تر ہیں اور یہ کہ قتال بھی جہاد کا حصہ ہے۔لیکن قرآن مجید میں جہاں جہاں لفظ جہاد آیا ہے اس کا ترجمہ قتال کردینا مناسب نہیں ہے۔

دہشت گردی کے روپ

دہشت گردی کے روپ

دہشت گردی کے بھی کئی روپ ہیں۔ جس دن سے میں نے جنوبی یارکشائر، ڈونکاسٹر کے رہائشی جیمز ہاؤسن اور اس کی سولہ ماہ کی بیٹی ایمی کی کہانی پڑھی ہے میں بری طرح خوفزدہ ہوں۔ جیمز ہاؤسن نے اپنی بیٹی ایمی کو قتل کر دیا تھا اور اسے اس گھناؤنے جرم پر عمر قید کی سزا ہوئی ہے اور وہ کم از کم جیل میں بائیس سال گزارے گا۔ یہ معلوم نہیں کہ اس وقت جیمز کے دماغ میں کیا تھا لیکن اس نے بس اتنا کیا کہ اپنی سولہ ماہ کی معصوم بچی کو اپنے گھٹنے پر زور سے مارا اور اس کی ریڑھ کی ہڈی توڑ ڈالی۔ وہ بیچاری اپنے باپ سے کوئی گلہ کیے بغیر دم توڑ گئی۔ جب سے یہ خبر پڑھی ہے دل و دماغ پر ایک دہشت سی طاری ہے اور یوں لگتا ہے جیسے ریڑھ کی ہڈی بجلی سی چمک رہی ہو۔ کیا کوئی باپ ایسا کر سکتا ہے۔ اس کے ساتھ ساتھ دماغ میں برطانیہ سے ہزاروں میل دور فلسطین کے اس باپ کا بھی خیال آ رہا ہے جس نے اپنے بارہ سالہ بیٹے کو اسرائیلی گولیوں سے بچاتے بچاتے سینے پر گولیاں کھائیں لیکن بدقسمتی سے اپنے لختِ جگر کو بچانے میں کامیاب نہ سکا۔

بارہ سالہ محمد کا باپ جمال الدرہ پینتالیس منٹ تک اپنے بچے کو اپنی کمر کے پیچھے چھپائے اسرائیلی فوجیوں سے التجا کرتا رہا کہ وہ فائرنگ بند کر دیں۔ لیکن ایسا نہ ہوا۔ محمد توچار گولیاں کھا کے اس دنیا سے چلا گیا لیکن اس کے باپ کی اپنے بیٹے کو بچانے کی کوششیں ان سب لوگوں کے ذہنوں میں تمام عمر رہیں گی جنہوں نے اس کربناک منظر کو ٹی وی پر دیکھا یا اخباروں میں پڑھا۔

ڈونکاسٹر اور غزہ کے باپ میں کتنا فرق ہے!

تیرے لوگوں سے گلہ ہے مرے آئینوں کو

ان کو پتھر نہیں دیتا ہے تو بینائی دے